Latest

جمشید دستی کے الزامات، پارلیمانی کمیٹی نے تحقیقات شروع کردی

جمشید دستی کے الزامات، پارلیمانی کمیٹی نے تحقیقات شروع کردی
اسلام آباد (طاہر خلیل / عاصم یٰسین) جمشید دستی کے الزامات پر اراکین پارلیمان کی سرکاری رہائش گاہ پارلیمنٹ لاجز میں غیر اخلاقی سرگرمیوں کی تحقیقات کرنے والی خصوصی پارلیمانی کمیٹی نے کام شروع کر دیا۔ منگل کو 7رکنی کمیٹی نے پہلے اجلاس میں شیخ روحیل اصغر ایم این اے کو چیئرمین منتخب کر لیا۔ جمشید دستی کو آج خصوصی کمیٹی میں ثبوت کے ساتھ ساڑھے گیارہ بجے طلب کیاگیاہے۔ سات رکنی کمیٹی میں روحیل اصغر، میاں عبدالمنان، ڈاکٹر عارف علوی، کاظم علی شاہ، سہیل منصور، شاہدہ اختر علی اور ظفرلغاری شامل ہیں۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ جمشید دستی کو آج کے اجلاس میں طلبی کا نوٹس جاری کر دیا گیاہے۔ پارلیمانی کمیٹی کے ارکان نے منگل کو اسپیکر سردار ایاز صادق سے بھی ملاقات کی۔ ذرائع نے بتایا کہ جمشید دستی نے دو سی ڈیز ثبوت کے طور پر پیش کی ہیں۔ ایک میں وہ خود پارلیمنٹ لاجز میں جھاڑیوں سے شراب کی بوتلیں جمع کرتے دکھائی دیئے گئے ہیں لیکن اس سے کہیں ثابت نہیں ہوتا کہ خالی بوتلیں کس ایم این اے نے جھاڑیوں میں رکھی تھیں جنہیں جمشید دستی احتیاط کے ساتھ جمع کرتے رہےایک دوسری سی ڈی رقص و سرود کی ایک محفل کی ہے۔ اس سے بھی یہ پتہ نہیں چلتا کہ محفل رقص و سرود کون سے پارلیمنٹیرنز نے سجائی اور اس کے تماش بین کون ہیں کیونکہ غیر معروف چہروں سے بظاہر کوئی بھی پارلیمنٹیرین نظر نہیں آیا۔ خصوصی پارلیمانی کمیٹی کو اپنا کام مکمل کرنے کے لئے دو ہفتے کی مہلت دی گئی ہے تاہم توقع کی جارہی ہے کہ پارلیمانی کمیٹی قبل از مدت ہی کام مکمل کرلے گی اور اسکی رپورٹ ایوان میں پیش کی جائے گی۔ حتمی فیصلہ قومی اسمبلی کا ایوان کرے گا۔