Latest

فضل الرحمٰن نے قومی سلامتی پالیسی کیخلاف احتجاجی مظاہروں کااعلان کردیا

فضل الرحمٰن نے قومی سلامتی پالیسی کیخلاف احتجاجی مظاہروں کااعلان کردیا
صوابی(نمائندہ جنگ)جمعیت علمائے اسلام (ف)کے سربراہ فضل الرحمٰن نے مرکزی حکومت کا قومی سلامتی پالیسی میں اصلاحات کے نام پر مدارس کو نشانہ بنانے کے خلاف20 مارچ کو ملتا ن ،22 مارچ کو پشاور میں احتجاجی مظاہروں کااعلان کیا ہے جبکہ کوئٹہ اور کراچی میں بھی احتجاجی مظاہرے کیے جائینگے۔ انہوں نے یہ اعلان بدھ کو بزرگ عالم دین شیخ الحدیث مولانا محمد ابراہیم فانی کی وفات پر فاتحہ خوانی کے بعد اخباری نمائندوں سے گفتگو کے دوران کیا۔ مولانا فضل الرحمٰن نے کہا کہ جمعیت علمائے اسلام اور دیگر دینی جماعتوں نے قومی پالیسی آنے پر مذاکرات کئے اس پر ہمارے تحفظات ہیں کیوں کہ اس قومی سلامتی پالیسی میں ایک بار پھر اصلاحات کے نام پر مدارس اور ان کے کردار کا خاتمہ کرنا مقصود ہے ۔ اور یہ عالمی ایجنڈے کی پالیسی کا حصہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ طالبان کے ساتھ مذاکرات کا وہ راستہ نہیں اپنا یا گیا جو اختیار کرنا چاہیے تھا۔