Latest

انجام

انجام

ہیں لبریز آ ہوں سے ٹھنڈی ہوائیں
اَداسی میں ڈوبی ہوئی ہیں گھٹا ئیں
محبت کی دنیا پر شام آ چکی ہے
سیہ پوش ہیں زندگی کی فضائیں
مچلتی ہیں سینے میں لاکھ آرزوئیں
تڑپتی ہیں آنکھوں میں لاکھ التجائیں
تغافل کے آغوش میں سو رہے ہیں
تمہارے ستم اور میری وفائیں
مگر پھر بھی اے میرے معصوم قاتل
تمہیں پیار کرتی ہیں میری دعائیں
فیض احمد فیض


1 Comment on انجام

  1. Cool know-how! I have been hunting for anything like this for a time now. With thanks!

Comments are closed.